نواز شریف کے وارنٹ گرفتاری جاری کرنے کی درخواست رد

نواز شریف اور عدالتیں

نواز شریف نیب میں پیش نہیں ہوئے

نواز شریف اور بچوں کو نیب عدالت میں پیش ہونے کا حکم

انھوں نے بتایا کہ جب نیب کے اہلکار ملزمان کے لاہور میں موجودہ پتے پر گئے تو وہاں موجود سکیورٹی اہلکاروں نے انھیں اندر جانے کی اجازت نہیں دی اور خود ہی نواز شریف اور ان کے بچوں کے سمن وصول کیے۔

بی بی سی کے نامہ نگار شہزاد ملک کے مطابق عدالت نے پراسیکیوٹر سے استفسار کیا کہ کیا مذکورہ سکیورٹی اہلکار کا بیان ریکارڈ کیا گیا تھا جس پر نیب پراسیکیوٹر نے نفی میں جواب دیا۔

اس پر عدالت نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ یہ کوئی چوری چکاری کا نہیں بلکہ فوجداری مقدمہ ہے اور ضابطے کی کارروائی مکمل کرنا ضروری ہے۔

نامہ نگار کے مطابق نیب پراسیکیوٹر نے عدالت کو بتایا کہ ملزمان عدالتی سمن کو سنجیدگی سے نہیں لے رہے اور استدعا کی کہ ان کی گرفتاری کے وارنٹ جاری کیے جائیں۔

عدالت نے اس درخواست کو مسترد کرتے ہوئے ملزمان کو 26 ستمبر کو عدالت میں پیش ہونے کا حکم دیا۔

 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے