متنازع پچ پر کھیلا گیا میچ انڈیا نے جیت لیا

پونے کی متنازع پچ پر کھیلے جانے والے دوسرے ایک روزہ کرکٹ میچ میں انڈیا نے نیوزی لینڈ کو شکست دے کر سیریز برابر کر دی ہے۔

تین ایک روزہ میچوں کی سیریز کے دوسرے میچ میں انڈیا نے مہمان ٹیم کو چھ وکٹوں سے شکست دی۔

نیوزی لینڈ نے اس میچ میں پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے نو کھلاڑیوں کے نقصان پر 230 رنز بنائے جسے انڈیا نے 46 اووروں میں چار وکٹوں کے نقصان پر پورا کر دیا۔

خیال رہے کہ انڈیا میں ایک ٹی وی نیوز چینل نے دعویٰ کیا تھا کہ پونے میں کھیلے جانے والے دوسرے ایک روزہ میچ سے قبل میدان کے کیوریٹر نے نامہ نگاروں سے وعدہ کیا تھا کہ وہ ان کی پسند کے مطابق پچ تیار کریں گے۔

ٹی وی چینل کے صحافیوں نے اس ‘سٹنگ’ میں خود کو بکیز کے طور پر پیش کیا تھا۔ ان الزامات کے سامنے آنے کے بعد کیوریٹر پنڈورانگ سالگاؤنکر کو معطل کر دیا گیا تھا اور میدان میں ان کے داخل ہونے پر پابندی لگا دی گئی تھی۔

سالگاؤنکر خود سابق فرسٹ کلاس کرکٹر ہیں اور ان پر یہ الزام بھی ہے کہ انھوں نے چینل کے صحافیوں کو پچ پرجانے اور اس کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرنے کی اجازت بھی دی تھی۔

لیکن انڈیا اور نیوزی لینڈ کےدرمیان میچ پروگرام کے مطابق کھیلا گیا۔

اس میچ میں انڈیا کی جانب سے ہدف کے تعاقب میں شکھر دھون 68 اور دنیش کارتک 64 رنز بنا کر نمایاں بلے باز رہے۔

اس سے قبل نیوزی لینڈ کی اننگز میں ہینری نکولس نے سب سے زیادہ 42 رنز سکور کیے جبکہ انڈیا کی جانب سے بھونیشور کمار نے تین، بمراہ اور چاہل نے دو، دو کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

کرکٹ پچ (فائل فوٹو)تصویر کے کاپی رائٹGETTY IMAGES
Image captionکرکٹ پچ کی ایک پرانی تصویر

تین میچوں کی اس سیریز کا پہلا کرکٹ میچ نیوزی لینڈ نے جیتا تھا۔

خبر رساں ادارے پی ٹی آئی کے مطابق بھارتی کرکٹ کنٹرول بورڈ کے سیکریٹری امیتابھ چودھری نے سالگاؤنکر کو معطل کیے جانے کی تصدیق کر دی ہے اور ان کے مطابق بی سی سی آئی اس پورے معاملے کی تحقیقات کرائے گا۔

امیتابھ چودھریتصویر کے کاپی رائٹPTI
Image captionامیتابھ چودھری نے کہا ہے کہ بی سی سی آئی اس بارے میں جانچ کرے گی

ٹی وی چینل کی جاری کردہ ویڈیوز کے مطابق صحافیوں نے جب سالگاؤنکر سے پوچھا کہ کیا وہ زیادہ باؤنس والی پچ تیار کر سکتے ہیں تو انھوں نے کہا کہ ‘ہاں، یہ کیا جا سکتا ہے۔’

کیوریٹر کے مطابق اس وکٹ پر تقریباً 340 رن بن سکتے ہیں۔

فروری میں آسٹریلیا کے خلاف ٹیسٹ میچ کے بعد میچ ریفری کرس بورڈ نے اسی پچ کو ‘خراب’ قرار دیا تھا۔ یہ میچ انڈیا 333 رن سے ہار گیا تھا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے