سینیٹ الیکشن : ضمیر فروشی یا کچھ اور

لاہور(ویب ڈیسک) ہارس ٹریڈنگ تو نہیں کی البتہ دیگر پارٹیوں کے ارکان نے مجھے ووٹ ضرور دیے۔ کے پروگرام آواز میں چوہدری سرور نے اعتراف کرلیا۔تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں اینکر نے سوال کرتے ہوئے کہا کہ سینیٹ الیکشن میں پی پی امیدوار کو 26 جبکہ

آپ کو 44 ووٹ کیسے پڑ گئے؟ جس پر چودھر ی سرور نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ 10 ووٹرز کے نام تو میں نےآپ کو بتا دیے ہیں۔ باقی 4 رہتے ہیں اور آپ کو معلوم ہے کہ انسان کے اپنے ذاتی تعلقات بھی ہوتے ہیں۔ پاکستان تحریک انصاف نے مزید وضاحت دیتے ہوئے کہا کہ میں آپ کو یہ تو نہیں بتا سکتا کہ ووٹ کہاں سے آئیں ہیں، انہوں نے کہا کہ ووٹ شاید پیپلزپارٹی سے بھی آئے ہیں گے، مسلم لیگ (ن) سے بھی دو سے تین ووٹ آئے ہوں گے، مسلم لیگ(ن) سے بھی آئے ہوں گے۔ انہوں نے دوسری جماعتوں سے ووٹ لینے کا اعتراف کرتے ہوئے کہ پاکستان تحریک انصاف ہارس ٹریڈنگ پر نہ ہی یقین رکھتی ہے اور نہ ہی پاکستان تحریک انصاف کے اصول میں شامل ہے۔ پی ٹی آئی رہنما چودھری سرور نے مسلم لیگ (ن) کے رہنما مصدق ملک کی بات سے اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ سسٹم میں خامی تو ہے لیکن اسے دور کیے بغیر عوام کا اعتماد حاصل نہیں کر سکتے۔ انہوں نے مزید کیا کہا ویڈیو دیکھیں۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے