ریلیز کے 5 ہفتوں بعد ’نامعلوم افراد 2‘ پر پنجاب میں پابندی

فلم ’نامعلوم افراد 2‘ رواں سال عیدالضحیٰ پر سینما گھروں میں پیش کی گئی تھی —۔
فلم ’نامعلوم افراد 2‘ رواں سال عیدالضحیٰ پر سینما گھروں میں پیش کی گئی تھی —۔

پاکستانی فلم ’نامعلوم افراد 2‘ کو اپنی کہانی کے باعث متحدہ عرب امارات میں پابندی کا سامنا کرنا پڑا تھا اور ریلیز کے پانچ ہفتوں بعد اس فلم کو اب پنجاب میں بھی پابندی کا سامنا کرنا پڑ گیا۔

پنجاب فلم سنسر بورڈ نے فلم ’نامعلوم افراد2‘ کی پنجاب میں نمائش روک دی، جس کی وجہ فلم میں موجود چند سینز پر مستقل شکایات کا موصول ہونا ہے۔

 نامعلوم افراد – 2 : ’سونے کا کموڈ‘ چوری

سنسر بورڈ کی جانب سے جاری کردہ نوٹیفیکیشن میں فلم میں موجود ان سینز کے بارے میں نہیں بتایا گیا جس کی وجہ سے فلم کی نمائش پر پابندی عائد کی گئی۔

اس کامیڈی فلم میں جاوید شیخ، فہد مصطفیٰ، محسن عباس حیدر، ہانیہ عامر اور عروہ حسین نے کام کیا۔

فلم کی کہانی میں مرکزی اداکاروں کے کیپ ٹاؤن کی ٹرپ پر فوکس کیا گیا، جہاں انہوں نے ایک عربی شیخ کا سونے سے بنا ٹوائلٹ چوری کرلیا تھا۔

خیال رہے کہ فلم میں عرب کی مبینہ طور پر غلط امیج دکھانے پر اسے متحدہ عرب امارات میں پابندی کا سامنا کرنا پڑا تھا، تاہم فلم کی پروڈیوسر فضا علی میرزا کا کہنا تھا کہ ’اس پابندی سے فلم کو کوئی نقصان نہیں پہنچا‘۔

ڈان کو دیے ایک انٹرویو میں فضا علی میرزا نے کہا تھا کہ ’اس فلم میں ہم دنیا بھر سے تعلق رکھنے والے ان عربی شیخوں کا مزاق بنارہے ہیں جو بےانتہا فضول خرچی کرتے ہیں، جنہیں ایک عام آدمی کی پریشانیوں سے کوئی فرق نہیں پڑتا، ہم اپنی فلموں میں سماجی مسائل کو شامل کرنے پر زور دیتے ہیں، اس لیے شیخ کا یہ کردار شامل کیا‘۔

اب دیکھنا یہ ہے کہ فضا علی میرزا پنجاب میں فلم پر لگنے والی پابندی کے حوالے سے کیا کہیں گی۔

You May Also Like

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے