حلالہ کیلئے مرد کا شادی کرنا ضروری ہے یا عورت کا؟ عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی، عارف نظامی نے لائیو شو میں ایسی بات کہہ دی کہ کپتان سمیت پوری پی ٹی آئی سٹپٹا کررہ گئی

حلالہ کیلئے مرد کا شادی کرنا ضروری ہے یا عورت کا؟ عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی، عارف نظامی نے لائیو شو میں ایسی بات کہہ دی کہ کپتان سمیت پوری پی ٹی آئی سٹپٹا کررہ گئی پاکستان کے سینئر صحافی و تجزیہ کار عارف نظامی نے نجی ٹی وی پروگرام میں عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف والے عموماََ مجھ سےاس حوالے سے ناراض رہتے ہیں

کہ میں عمران خان کی شادی اور طلاقوں کے حوالے سے باخبر ہوں یا افواہیں اڑاتا رہتا ہوں۔ جمائما کی پاکستان آمد کےحوالے سے عارف نظامی کا کہنا تھا کہ جمائما خان عمران خان کے بچوں کی والدہ ہیںاور وہ پاکستان سے خصوصی محبت رکھتی ہیں، وہ ایک نہایت سلجھی ہوئی اور مضبوط کردار کی مالک خاتون ہیںجس کا انہوں نے عمران خان نا اہلی کیس کے دوران مظاہرہ بھی کیا ہے۔

نا اہلی کیس کے دوران عمران خان نے جب جمائما سے دستاویزت کیلئے کہا تو وہ انکار کرتے ہوئے کہہ سکتی تھیں کہ تمہارا مجھ سے اب کیا تعلق ، جائو بھاڑ میں، مگر انہوں نے ایسا نہیں کیا بلکہ اس حوالے سے عمران خان کی مدد کی۔ عارف نظامی نے عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے کہا کہ عمران خان اگر جمائما سے شادی کرنا چاہتے ہیں تو کر سکتے ہیں

کیونکہ مذہبی اعتبار سے وہ حلالہ تو کر چکے ہیں، عارف نظامی کا اشارہ ریحام خان سے شادی کے حوالے سے تھا۔ خیال رہے کہ مذہبی اعتبار سے طلاق یافتہ میاں بیوی اگر دوبارہ شادی کرنا چاہیں تو ان کیلئے شرعی اعتبار سے حلالہ کی شرط ہے یعنی کسی اور کو پہلے جیون ساتھی بنانا ہو گا اور اس کیلئے مذہبی سکالرز کا کہنا ہے کہ حلالہ کیلئے خاتون کو شادی کرنا پڑتی ہے

اور یہ شرط شریعت نے اس لئے رکھی ہے کہ کوئی مرد نہیں چاہے گا کہ اس کی محبوب بیوی کسی اور کی ہو اس لئے وہ طلاق دینے سے پہلے متعدد مرتبہ سوچے گا اور یہ شریعت کی یہ شرط طلاق کی شرح کو کنٹرول کرنے کیلئے رکھی گئی ہے کیونکہ حدیث شریف کےمفہوم کے مطابق طلاق اللہ تعالیٰ کو انتہائی ناپسندیدہ ہے ۔اب عارف نظامی نے عمران خان کی

ریحام خان سے شادی اور پھر طلاق کی جانب اشارہ کرتے ہوئے اسے عمران خان کا حلالہ قرار دیا ہے جس کو لےکر سوشل میڈیا پر ایک الگ بحث شروع ہو چکی ہے، کئی لوگ اسے عارف نظامی کی مذہبی معلومات میں کمی بتا رہے ہیں اور کئی اسے عارف نظامی کی جانب سے کپتان کو چھیڑنے کی کوشش کہہ رہے ہیں۔

حلالہ کیلئے مرد کا شادی کرنا ضروری ہے یا عورت کا؟ عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی، عارف نظامی نے لائیو شو میں ایسی بات کہہ دی کہ کپتان سمیت پوری پی ٹی آئی سٹپٹا کررہ گئی پاکستان کے سینئر صحافی و تجزیہ کار عارف نظامی نے نجی ٹی وی پروگرام میں عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف والے عموماََ مجھ سےاس حوالے سے ناراض رہتے ہیں

کہ میں عمران خان کی شادی اور طلاقوں کے حوالے سے باخبر ہوں یا افواہیں اڑاتا رہتا ہوں۔ جمائما کی پاکستان آمد کےحوالے سے عارف نظامی کا کہنا تھا کہ جمائما خان عمران خان کے بچوں کی والدہ ہیںاور وہ پاکستان سے خصوصی محبت رکھتی ہیں، وہ ایک نہایت سلجھی ہوئی اور مضبوط کردار کی مالک خاتون ہیںجس کا انہوں نے عمران خان نا اہلی کیس کے دوران مظاہرہ بھی کیا ہے۔

نا اہلی کیس کے دوران عمران خان نے جب جمائما سے دستاویزت کیلئے کہا تو وہ انکار کرتے ہوئے کہہ سکتی تھیں کہ تمہارا مجھ سے اب کیا تعلق ، جائو بھاڑ میں، مگر انہوں نے ایسا نہیں کیا بلکہ اس حوالے سے عمران خان کی مدد کی۔ عارف نظامی نے عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے کہا کہ عمران خان اگر جمائما سے شادی کرنا چاہتے ہیں تو کر سکتے ہیں

کیونکہ مذہبی اعتبار سے وہ حلالہ تو کر چکے ہیں، عارف نظامی کا اشارہ ریحام خان سے شادی کے حوالے سے تھا۔ خیال رہے کہ مذہبی اعتبار سے طلاق یافتہ میاں بیوی اگر دوبارہ شادی کرنا چاہیں تو ان کیلئے شرعی اعتبار سے حلالہ کی شرط ہے یعنی کسی اور کو پہلے جیون ساتھی بنانا ہو گا اور اس کیلئے مذہبی سکالرز کا کہنا ہے کہ حلالہ کیلئے خاتون کو شادی کرنا پڑتی ہے

اور یہ شرط شریعت نے اس لئے رکھی ہے کہ کوئی مرد نہیں چاہے گا کہ اس کی محبوب بیوی کسی اور کی ہو اس لئے وہ طلاق دینے سے پہلے متعدد مرتبہ سوچے گا اور یہ شریعت کی یہ شرط طلاق کی شرح کو کنٹرول کرنے کیلئے رکھی گئی ہے کیونکہ حدیث شریف کےمفہوم کے مطابق طلاق اللہ تعالیٰ کو انتہائی ناپسندیدہ ہے ۔اب عارف نظامی نے عمران خان کی

ریحام خان سے شادی اور پھر طلاق کی جانب اشارہ کرتے ہوئے اسے عمران خان کا حلالہ قرار دیا ہے جس کو لےکر سوشل میڈیا پر ایک الگ بحث شروع ہو چکی ہے، کئی لوگ اسے عارف نظامی کی مذہبی معلومات میں کمی بتا رہے ہیں اور کئی اسے عارف نظامی کی جانب سے کپتان کو چھیڑنے کی کوشش کہہ رہے ہیں۔

حلالہ کیلئے مرد کا شادی کرنا ضروری ہے یا عورت کا؟ عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی، عارف نظامی نے لائیو شو میں ایسی بات کہہ دی کہ کپتان سمیت پوری پی ٹی آئی سٹپٹا کررہ گئی پاکستان کے سینئر صحافی و تجزیہ کار عارف نظامی نے نجی ٹی وی پروگرام میں عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف والے عموماََ مجھ سےاس حوالے سے ناراض رہتے ہیں

کہ میں عمران خان کی شادی اور طلاقوں کے حوالے سے باخبر ہوں یا افواہیں اڑاتا رہتا ہوں۔ جمائما کی پاکستان آمد کےحوالے سے عارف نظامی کا کہنا تھا کہ جمائما خان عمران خان کے بچوں کی والدہ ہیںاور وہ پاکستان سے خصوصی محبت رکھتی ہیں، وہ ایک نہایت سلجھی ہوئی اور مضبوط کردار کی مالک خاتون ہیںجس کا انہوں نے عمران خان نا اہلی کیس کے دوران مظاہرہ بھی کیا ہے۔

نا اہلی کیس کے دوران عمران خان نے جب جمائما سے دستاویزت کیلئے کہا تو وہ انکار کرتے ہوئے کہہ سکتی تھیں کہ تمہارا مجھ سے اب کیا تعلق ، جائو بھاڑ میں، مگر انہوں نے ایسا نہیں کیا بلکہ اس حوالے سے عمران خان کی مدد کی۔ عارف نظامی نے عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے کہا کہ عمران خان اگر جمائما سے شادی کرنا چاہتے ہیں تو کر سکتے ہیں

کیونکہ مذہبی اعتبار سے وہ حلالہ تو کر چکے ہیں، عارف نظامی کا اشارہ ریحام خان سے شادی کے حوالے سے تھا۔ خیال رہے کہ مذہبی اعتبار سے طلاق یافتہ میاں بیوی اگر دوبارہ شادی کرنا چاہیں تو ان کیلئے شرعی اعتبار سے حلالہ کی شرط ہے یعنی کسی اور کو پہلے جیون ساتھی بنانا ہو گا اور اس کیلئے مذہبی سکالرز کا کہنا ہے کہ حلالہ کیلئے خاتون کو شادی کرنا پڑتی ہے

اور یہ شرط شریعت نے اس لئے رکھی ہے کہ کوئی مرد نہیں چاہے گا کہ اس کی محبوب بیوی کسی اور کی ہو اس لئے وہ طلاق دینے سے پہلے متعدد مرتبہ سوچے گا اور یہ شریعت کی یہ شرط طلاق کی شرح کو کنٹرول کرنے کیلئے رکھی گئی ہے کیونکہ حدیث شریف کےمفہوم کے مطابق طلاق اللہ تعالیٰ کو انتہائی ناپسندیدہ ہے ۔اب عارف نظامی نے عمران خان کی

ریحام خان سے شادی اور پھر طلاق کی جانب اشارہ کرتے ہوئے اسے عمران خان کا حلالہ قرار دیا ہے جس کو لےکر سوشل میڈیا پر ایک الگ بحث شروع ہو چکی ہے، کئی لوگ اسے عارف نظامی کی مذہبی معلومات میں کمی بتا رہے ہیں اور کئی اسے عارف نظامی کی جانب سے کپتان کو چھیڑنے کی کوشش کہہ رہے ہیں۔

حلالہ کیلئے مرد کا شادی کرنا ضروری ہے یا عورت کا؟ عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی، عارف نظامی نے لائیو شو میں ایسی بات کہہ دی کہ کپتان سمیت پوری پی ٹی آئی سٹپٹا کررہ گئی پاکستان کے سینئر صحافی و تجزیہ کار عارف نظامی نے نجی ٹی وی پروگرام میں عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف والے عموماََ مجھ سےاس حوالے سے ناراض رہتے ہیں

کہ میں عمران خان کی شادی اور طلاقوں کے حوالے سے باخبر ہوں یا افواہیں اڑاتا رہتا ہوں۔ جمائما کی پاکستان آمد کےحوالے سے عارف نظامی کا کہنا تھا کہ جمائما خان عمران خان کے بچوں کی والدہ ہیںاور وہ پاکستان سے خصوصی محبت رکھتی ہیں، وہ ایک نہایت سلجھی ہوئی اور مضبوط کردار کی مالک خاتون ہیںجس کا انہوں نے عمران خان نا اہلی کیس کے دوران مظاہرہ بھی کیا ہے۔

نا اہلی کیس کے دوران عمران خان نے جب جمائما سے دستاویزت کیلئے کہا تو وہ انکار کرتے ہوئے کہہ سکتی تھیں کہ تمہارا مجھ سے اب کیا تعلق ، جائو بھاڑ میں، مگر انہوں نے ایسا نہیں کیا بلکہ اس حوالے سے عمران خان کی مدد کی۔ عارف نظامی نے عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے کہا کہ عمران خان اگر جمائما سے شادی کرنا چاہتے ہیں تو کر سکتے ہیں

کیونکہ مذہبی اعتبار سے وہ حلالہ تو کر چکے ہیں، عارف نظامی کا اشارہ ریحام خان سے شادی کے حوالے سے تھا۔ خیال رہے کہ مذہبی اعتبار سے طلاق یافتہ میاں بیوی اگر دوبارہ شادی کرنا چاہیں تو ان کیلئے شرعی اعتبار سے حلالہ کی شرط ہے یعنی کسی اور کو پہلے جیون ساتھی بنانا ہو گا اور اس کیلئے مذہبی سکالرز کا کہنا ہے کہ حلالہ کیلئے خاتون کو شادی کرنا پڑتی ہے

اور یہ شرط شریعت نے اس لئے رکھی ہے کہ کوئی مرد نہیں چاہے گا کہ اس کی محبوب بیوی کسی اور کی ہو اس لئے وہ طلاق دینے سے پہلے متعدد مرتبہ سوچے گا اور یہ شریعت کی یہ شرط طلاق کی شرح کو کنٹرول کرنے کیلئے رکھی گئی ہے کیونکہ حدیث شریف کےمفہوم کے مطابق طلاق اللہ تعالیٰ کو انتہائی ناپسندیدہ ہے ۔اب عارف نظامی نے عمران خان کی

ریحام خان سے شادی اور پھر طلاق کی جانب اشارہ کرتے ہوئے اسے عمران خان کا حلالہ قرار دیا ہے جس کو لےکر سوشل میڈیا پر ایک الگ بحث شروع ہو چکی ہے، کئی لوگ اسے عارف نظامی کی مذہبی معلومات میں کمی بتا رہے ہیں اور کئی اسے عارف نظامی کی جانب سے کپتان کو چھیڑنے کی کوشش کہہ رہے ہیں۔

حلالہ کیلئے مرد کا شادی کرنا ضروری ہے یا عورت کا؟ عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی، عارف نظامی نے لائیو شو میں ایسی بات کہہ دی کہ کپتان سمیت پوری پی ٹی آئی سٹپٹا کررہ گئی پاکستان کے سینئر صحافی و تجزیہ کار عارف نظامی نے نجی ٹی وی پروگرام میں عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف والے عموماََ مجھ سےاس حوالے سے ناراض رہتے ہیں

کہ میں عمران خان کی شادی اور طلاقوں کے حوالے سے باخبر ہوں یا افواہیں اڑاتا رہتا ہوں۔ جمائما کی پاکستان آمد کےحوالے سے عارف نظامی کا کہنا تھا کہ جمائما خان عمران خان کے بچوں کی والدہ ہیںاور وہ پاکستان سے خصوصی محبت رکھتی ہیں، وہ ایک نہایت سلجھی ہوئی اور مضبوط کردار کی مالک خاتون ہیںجس کا انہوں نے عمران خان نا اہلی کیس کے دوران مظاہرہ بھی کیا ہے۔

نا اہلی کیس کے دوران عمران خان نے جب جمائما سے دستاویزت کیلئے کہا تو وہ انکار کرتے ہوئے کہہ سکتی تھیں کہ تمہارا مجھ سے اب کیا تعلق ، جائو بھاڑ میں، مگر انہوں نے ایسا نہیں کیا بلکہ اس حوالے سے عمران خان کی مدد کی۔ عارف نظامی نے عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے کہا کہ عمران خان اگر جمائما سے شادی کرنا چاہتے ہیں تو کر سکتے ہیں

کیونکہ مذہبی اعتبار سے وہ حلالہ تو کر چکے ہیں، عارف نظامی کا اشارہ ریحام خان سے شادی کے حوالے سے تھا۔ خیال رہے کہ مذہبی اعتبار سے طلاق یافتہ میاں بیوی اگر دوبارہ شادی کرنا چاہیں تو ان کیلئے شرعی اعتبار سے حلالہ کی شرط ہے یعنی کسی اور کو پہلے جیون ساتھی بنانا ہو گا اور اس کیلئے مذہبی سکالرز کا کہنا ہے کہ حلالہ کیلئے خاتون کو شادی کرنا پڑتی ہے

اور یہ شرط شریعت نے اس لئے رکھی ہے کہ کوئی مرد نہیں چاہے گا کہ اس کی محبوب بیوی کسی اور کی ہو اس لئے وہ طلاق دینے سے پہلے متعدد مرتبہ سوچے گا اور یہ شریعت کی یہ شرط طلاق کی شرح کو کنٹرول کرنے کیلئے رکھی گئی ہے کیونکہ حدیث شریف کےمفہوم کے مطابق طلاق اللہ تعالیٰ کو انتہائی ناپسندیدہ ہے ۔اب عارف نظامی نے عمران خان کی

ریحام خان سے شادی اور پھر طلاق کی جانب اشارہ کرتے ہوئے اسے عمران خان کا حلالہ قرار دیا ہے جس کو لےکر سوشل میڈیا پر ایک الگ بحث شروع ہو چکی ہے، کئی لوگ اسے عارف نظامی کی مذہبی معلومات میں کمی بتا رہے ہیں اور کئی اسے عارف نظامی کی جانب سے کپتان کو چھیڑنے کی کوشش کہہ رہے ہیں۔

حلالہ کیلئے مرد کا شادی کرنا ضروری ہے یا عورت کا؟ عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی، عارف نظامی نے لائیو شو میں ایسی بات کہہ دی کہ کپتان سمیت پوری پی ٹی آئی سٹپٹا کررہ گئی پاکستان کے سینئر صحافی و تجزیہ کار عارف نظامی نے نجی ٹی وی پروگرام میں عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف والے عموماََ مجھ سےاس حوالے سے ناراض رہتے ہیں

کہ میں عمران خان کی شادی اور طلاقوں کے حوالے سے باخبر ہوں یا افواہیں اڑاتا رہتا ہوں۔ جمائما کی پاکستان آمد کےحوالے سے عارف نظامی کا کہنا تھا کہ جمائما خان عمران خان کے بچوں کی والدہ ہیںاور وہ پاکستان سے خصوصی محبت رکھتی ہیں، وہ ایک نہایت سلجھی ہوئی اور مضبوط کردار کی مالک خاتون ہیںجس کا انہوں نے عمران خان نا اہلی کیس کے دوران مظاہرہ بھی کیا ہے۔

نا اہلی کیس کے دوران عمران خان نے جب جمائما سے دستاویزت کیلئے کہا تو وہ انکار کرتے ہوئے کہہ سکتی تھیں کہ تمہارا مجھ سے اب کیا تعلق ، جائو بھاڑ میں، مگر انہوں نے ایسا نہیں کیا بلکہ اس حوالے سے عمران خان کی مدد کی۔ عارف نظامی نے عمران خان اور جمائما کی دوبارہ شادی کے حوالے سے کہا کہ عمران خان اگر جمائما سے شادی کرنا چاہتے ہیں تو کر سکتے ہیں

کیونکہ مذہبی اعتبار سے وہ حلالہ تو کر چکے ہیں، عارف نظامی کا اشارہ ریحام خان سے شادی کے حوالے سے تھا۔ خیال رہے کہ مذہبی اعتبار سے طلاق یافتہ میاں بیوی اگر دوبارہ شادی کرنا چاہیں تو ان کیلئے شرعی اعتبار سے حلالہ کی شرط ہے یعنی کسی اور کو پہلے جیون ساتھی بنانا ہو گا اور اس کیلئے مذہبی سکالرز کا کہنا ہے کہ حلالہ کیلئے خاتون کو شادی کرنا پڑتی ہے

اور یہ شرط شریعت نے اس لئے رکھی ہے کہ کوئی مرد نہیں چاہے گا کہ اس کی محبوب بیوی کسی اور کی ہو اس لئے وہ طلاق دینے سے پہلے متعدد مرتبہ سوچے گا اور یہ شریعت کی یہ شرط طلاق کی شرح کو کنٹرول کرنے کیلئے رکھی گئی ہے کیونکہ حدیث شریف کےمفہوم کے مطابق طلاق اللہ تعالیٰ کو انتہائی ناپسندیدہ ہے ۔اب عارف نظامی نے عمران خان کی

ریحام خان سے شادی اور پھر طلاق کی جانب اشارہ کرتے ہوئے اسے عمران خان کا حلالہ قرار دیا ہے جس کو لےکر سوشل میڈیا پر ایک الگ بحث شروع ہو چکی ہے، کئی لوگ اسے عارف نظامی کی مذہبی معلومات میں کمی بتا رہے ہیں اور کئی اسے عارف نظامی کی جانب سے کپتان کو چھیڑنے کی کوشش کہہ رہے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے