ایشیائی ترقیاتی بینک کا پاکستان میں سیاسی عدم استحکام پر اظہارِ تشویش

ایشیائی ترقیاتی بینک کا پاکستان میں سیاسی عدم استحکام پر اظہارِ تشویش

ایشیائی :(نیو ز ڈیسک)ترقیاتی بینک نے پاکستان میں سیاسی عدم استحکام پر تشویش کا اظہار کیا ہے، بینک کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ منتخب وزیر اعظم کو نااہل کرنے کے عدالتی فیصلے سے ملک میں سیاسی عدم استحکام بڑھا ہے۔اےڈی بی کی طرف سے جاری کردہ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پاکستانی معیشت کو بعض

کامیابیوں کے باوجود سخت چیلنجز کا سامنا ہے۔رپورٹ میں نشاندہی کی گئی ہے کہ پالیسی ساز فیصلوں کی رفتار کم ہونے سےمعاشی ترقی کا عمل متاثر ہو سکتا ہے۔ پاکستان کو مالیاتی اور بیرونی ادائیگیوں جیسےمسائل کو حل کرنے کی ضرورت ہے۔بجٹ خسارہ پورا کرنے کےلیے حکومت بینکوں اور نان بنکنگ سیکٹر سے قرضہ لے رہی ہے۔ بڑھتے ہوئے حکومتی اخراجات کے باعث بجٹ خسارہ پورا کرنا ایک مشکل ہدف ہے۔رپورٹ میں نشاندہی کی گئی ہے کہ جی ڈی پی میں کرنٹ اکاؤنٹ خسارے کا تناسب4 اعشاریہ 2 فیصد تک پہنچ گیا ہے جبکہ بیرون ملک سے ترسیلات زر میں 3 فیصد کمی ہوئی ہے۔زرمبادلہ کے ذخائر 2 ارب ڈالر کمی سے 16ارب 10کروڑ ڈالر ہوگئے جو3 اعشاریہ 7 ماہ کی درآمدات کے بل کے برابر ہیں۔اے ڈی بی کا کہنا ہے کہ سیکورٹی کی بہتر صورتحال اور توانائی فراہمی میں بہتری آنے کی وجہ سے رواں مالی سال کےدوران اقتصادی ترقی کی شرح 5.5فی صد رہنے کی توقع ہے۔ اس ترقی میں بہتری کی وجہ سی پیک کے تحت جاری ترقیاتی منصوبے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے