اسلام آباد ہائی کورٹ نے عائشہ گلا لئی کو نا اہل قرار دینے کی درخواست خارج کر دی

اسلام آباد ہائی کورٹ نے عائشہ گلا لئی کو نا اہل قرار دینے کی درخواست خارج کر دی

اسلام آباد(نیوز ڈیسک )اسلام آباد ہائی کورٹ نے عائشہ گلا لئی کو نا اہل قرار دینے کی درخواست خارج کر دی ۔تفصیلات کے مطابق جسٹس عامر فاروق نے کیس کی ساعت کی۔درخواست گزار نے موقف اختیار کیا تھا کہ عائشہ گلالئی نے عمران خان پر جھوٹے الزامات لگائے، عوامی مینڈیٹ کی توہین کی گئی۔ عمران خان کے خلاف عدالتی کاروائی کے بجائے صرف

الزامات لگائے۔درخواست میں عدالت سے استدعا کی گئی کہ عائشہ گلالئی کو نا اہل قرار دے کر قومی اسمبلی کی سیٹ واپس لی جائے ۔ اب وہ عوامی نمائندگی ایکٹ کے تحت قومی اسمبلی کی سیٹ کی اہل نہیں رہی۔ درخواست میں اب وہ عوامی نمائندگی ایکٹ کے تحت قومی اسمبلی کی سیٹ کی اہل نہیں رہی۔ درخواست میں الیکشن کمیشن، اسپیکر قومی اسمبلی اور عائشہ گلالئی کو فریق بنایا گیا ۔عدالت نے اس پر فیصلہ سناتے ہوئے اس درخواست کو نا قابل سماعت قرار دیتے ہوئے خارج کر دیا ۔الیکشن کمیشن، اسپیکر قومی اسمبلی اور عائشہ گلالئی کو فریق بنایا گیا ۔عدالت نے اس پر فیصلہ سناتے ہوئے اس درخواست کو نا قابل سماعت قرار دیتے ہوئے خارج کر دیا ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے